Skip to main content
مینیو

بلاگ میں خوش آمدید

ملک کا انتخاب:
موضوع کا انتخاب:
پاکستان

محنت کا صلہ مل گیا

میں کمپنی میں کام کرتی تھی جسے کووڈ – 19 کی وبا کی وجہ سے بند کرنا پڑا۔ تو میں نے روایتی کپڑوں کی فروخت کا آن لائن کاروبار شروع کیا۔ میرا کاروبار کامیاب ہوگیا اور اس کیلیے میں پی جی ایف آر سی ملنے والی مدد کی بہت شکرگزار ہوں۔

مزید معلومات >
پاکستان

بہتر مواقعوں کی تلاش

مجھے جس کی تلاش تھی وہ مجھے مل گیا: میں اپنے آبائی ملک میں بطور ڈرائیور خود مختار ہوں۔ پاکستانی جرمن فیسلیٹیشن اینڈ ری اینٹی گریشن سینٹر نے اس موقع کی تلاش میں میری مدد کی۔

مزید معلومات >
پاکستان

بطور درزی اپنے ذاتی کاروبار کا آغاز

میں جرمنی اس لیے گیا تاکہ اپنے گھر والوں کی مدد کرسکوں۔ میری والدہ بیمار ہوئیں تو میں نے واپس آنے کا فیصلہ کیا۔ پاکستانی – جرمن فیسلیٹیشن اینڈ ری انٹی گریشن سینٹر (پی جی ایف آر سی) نے درزی کی دکان کھولنے میں میری مدد کی۔

مزید معلومات >
پاکستان

ایک خوش دکاندار پاکستان میں

پاکستانی جرمنی فیسیلیٹیشن اینڈ ری اینٹی گریشن سینٹر کی جانب سے فراہم کردہ مدد سے اب میں اپنا کاروبار کامیابی سے چلارہا ہوں۔

مزید معلومات >
پاکستان

فوٹو گرافی کے ذریعے نئے مواقعوں کی تلاش

نیا کام سیکھنا یا اپنا خود کا کاروبار شروع کرنا کئی لوگوں کا خواب ہوتا ہے۔ پاکستانی جرمن فیسیلیٹیشن سینٹر اینڈ ری اینٹی گریشن سینٹر (پی جی ایف آر سی) خوابوں کو حقیقت میں بدلنے میں مدد کرتی ہے۔ یہ اپنے شراکت دار اداروں کے ساتھ مل کر پیشہ وارانہ تربیت کراتی ہے، جس میں ایک ماہ فوٹوگرافی کا کورس بھی شامل ہے۔ ایک جھلک پردے کے پیچھے کی۔

مزید معلومات >
پاکستان

کھانا پکانے کے شعبے میں مستقبل بنانے کیلیے تربیتی کورس

نیا کام سیکھنا اور اپنا کاروبار شروع کرنا چند ان چیزوں میں سے ہے جس کا کئی لوگ خواب دیکھتے ہیں۔ پاکستانی – جرمن فیسیلیٹیشن اینڈ ری انٹی گریشن سینٹر (پی جی ایف آر سی) مدد فراہم کرتے ہیں جن میں فن طباخی کا تربیتی کورس بھی شامل ہے۔

مزید معلومات >
پاکستان

موٹرسائیکل مکینک کی تربیت کے ساتھ ایک نیا آغاز

نیا کام سیکھنا اور اپنا کاروبار شروع کرنا چند ان چیزوں میں سے ہے جس کا کئی لوگ خواب دیکھتے ہیں۔ پاکستانی – جرمن فیسیلیٹیشن اینڈ ری انٹی گریشن سینٹر (پی جی ایف آر سی) موٹرسائیکل مکینک کا تربیتی کورس فراہم کرکے مدد کرتا ہے۔

مزید معلومات >
پاکستان

آخر کار اپنے گھر والوں کے پاس واپسی۔

تربیتی پروگرام نے مجھے سکھایا کہ اپنا ٹیکسی کا کاروبار کیسے چلانا ہے۔

مزید معلومات >
گھانا

اگلا قدم اٹھانے کے لیے حوصلہ افزائی

ممکنہ آجروں کے ساتھ گفتگو، مستقبل کے اہم معاملات پر ورکشاپ اور سب سے بڑھ کر ڈھیر سارا حوصلہ: گھانا جاب فیئر2021 کے حوالے سے تاثرات

مزید معلومات >
پاکستان

کپڑے کی ذاتی دکان کے ساتھ نئی زندگی کا آغاز

میری اہلیہ اور میں نے کووِڈ-19 کی وبا کے دوران بھی اپنے کاروبار کو جاری رکھا۔

مزید معلومات >
پاکستان

ایک باکمال کاروباری شخصیت

میری واپسی کے بعد پی جی ایف آر سی ملنے والی مدد اور مشاورت نے کاروبار شروع کرنے اور اسے چلانے کو ممکن بنایا۔

مزید معلومات >
پاکستان

فاسٹ فوڈ کے ساتھ کامیاب

میں اپنے آبائی علاقے میں خود کا ریستوران چلاتا ہوں۔ اہم معاونت کا شکریہ،میں اپنے کاروبار کو مسلسل ترقی دے سکتا ہوں اور بحرانوں سے بھی نمٹ سکتا ہوں۔

مزید معلومات >
سینی گال

میرا خواب افریقی فیشن کا ارتقا

جرمنی میں گزرا وقت بہت اچھا تجربہ تھا۔ لیکن میں وہاں کام نہیں کرسکتا تھا۔ سینیگال میں واپس آکر میں اب سلائی کی دکان چلاتا ہوں اور اب میں ایک تیار لباس کی دکان کھولنے کا بھی سوچ رہا ہوں۔

مزید معلومات >
پاکستان

اپنا کاروبار۔۔۔ جذبہ اور روایت

میں نے پی جی ایف آر سی کی مدد سے کپڑوں کا کاروبار قائم کیا۔میری مشہوری میں سوشل میڈیا کااستعمال بھی شامل ہے۔

مزید معلومات >
تیونس

اپنے آپ کو جانچنا

کئی افراد بہتر زندگی کی تلاش میں تیونس کے ساحلی شہر سفیکس سے یورپ کی راہ لیتے ہیں۔ جرمن – تیونیشین سینٹر فار جابز، مائیگریشن اینڈ ری اینٹی گریشن (سی ٹی اے) کےمشیر اُسامہ ہجرت کے کچھ متبادل راستوں سے پردہ اٹھاتے ہیں۔

مزید معلومات >
کوسووو

بطور کسان زندگی گزارنے کیلیے نیا سفر

میرا نام ویلبونا ہے اور میں ایک ڈیری فارمر ہوں۔ میں شادی شدہ ہوں۔ میرے4 بچے اور ایک ماں ہے۔

مزید معلومات >
سینی گال

2 پہیوں پر ڈلیوری سروس

اپنی ڈلیوری سروس شروع کرنے کا مطلب ہے کہ دیگر نوجوانوں کو بھی اُن کے مستقبل کے امکانات کی پیشکش کرسکتا ہوں۔

مزید معلومات >
نائیجیریا

بطور "ماما فش" کامیابی

مچھلیوں کی افزائش کے تربیتی کورس میں جو علم میں نے حاصل کیا اُس کا مطلب ہے کہ میں اپنی کمپنی کھول سکتی ہوں۔

مزید معلومات >
نائیجیریا

میں اب ایک فیشن ڈیزائنر ہوں،میں اپنا ماضی پیچھے چھوڑ رہا ہوں۔

میری بہن اور میں نے آبائی وطن نائیجریا میں اپنے نام سے کاروبار شروع کیا.

مزید معلومات >
عراق

کھیرے اور مولی سے شروعات۔

ہماری واپسی کے بعد میری اہلیہ اور میں نے دوبارہ سے شروعات کی: سبزیاں اگانا اب ہمارا مستقبل ہے۔

مزید معلومات >
جرمنی

"بھروسہ ہماری سب سے اہم دولت ہے۔"

واپس لوٹنے والوں کے ساتھ گفتگو کا مرکزی نقطہ کیا ہوتا ہے؟ زینٹریل رکربیراتنگ سُدبائیرن (زیڈ آر بی – سینٹرل ریٹرن کاؤنسلنگ فار ساؤتھرن باویریا) کے مارکوس فیبگر اپنی ٹیم کے بارے میں گفتگو کرتے ہوئے

مزید معلومات >
البانیا

روایتی دستکاری کے ذریعے مستقبل کی تعمیر

کاروبار کیسے شروع کریں کی تربیت نے مجھے میری دلچسپی کو پیشے میں بدلنے کے قابل بنایا۔

مزید معلومات >
عراق

’ایک نئے آغاز کے لیے ہم مواقع فراہم کرتے ہیں‘

سلار ایربیل میں جی ایم اے سی میں ایک مشیر ہیں۔ یہاں انہوں نے اپنے روزہ مرہ کے معمولات پر گفتگو کی ہے۔

مزید معلومات >
کوسووو

"ہمارا مقصد ہر شخص کیلیے حل تلاش کرنا ہے"

ڈی ماک کے مشیر نیکسمیڈن باشا نفسیاتی مدد فراہم کرسکتے ہیں اگر ذہنی تناؤ کوسوو میں نوکری کی تلاش اور زندگی کو مشکل بنارہا ہو۔

مزید معلومات >
گھانا

ہم نے شادی شدہ جوڑے کے طور پر کاروبار کا آغاز کیا

اہلیہ اور میں نے گھانا میں 2 اشیائے خورونوش کے اسٹور کھولے۔یہاں تک کا سفر انتہائی مشکل تھا لیکن ہم نے ساتھ مل کر طے کیا۔

مزید معلومات >
مراکش

آرگینک نرسری سے ایک نیا آغاز

میں نے مراکش میں اپنے قصبے میں ایک چھوٹی سی سرسبز دنیا بنائی ہے۔ جس سے میں کماتا ہوں اور یہ استحکام کی جانب میرا حصہ ہے۔

مزید معلومات >
پاکستان

ایک نئے آغاز کے لیے خواتین کی حوصلہ افزائی

نگہت عزیز پاکستان جرمن فیسیلیٹیشن اینڈ ری اینٹی گریشن سینٹر(پی جی ایف آر سی مشیر ہیں اور ضرورت مند خواتین اور مرد حضرات کی رابطہ کار ہیں۔ یہ مرکز میں دیگر شراکت دار تنظیموں کے ساتھ مل کر اُن کی مخصوص ضروریات کے حل کیلیے کام کرتی ہیں۔

مزید معلومات >
عراق

جرمنی سے عراق اپنے تجربات سے فائدہ اٹھانا

اپنی ورکشاپ قائم کرنے نے میری زندگی کو بدل کر رکھ دیا۔

مزید معلومات >
تیونس

ثقافتی دستکاری کے نئے رجحانات

اپنے علاقے میں کپڑے بننے والوں کیلیے نامیاتی(غیرملاوٹ شدہ) معیار کا اُون،اس منصوبے نے مجھے کامیابی سے ہمکنار کیا۔

مزید معلومات >
سینی گال

بچوں اور خواتین کے لیے فیشن

Ich habe in Senegal ein Geschäft für Umstands- und Babykleidung eröffnet.

مزید معلومات >
سربیا

میرا کام مجھے معاشی تحفظ دیتا ہے

میں نے کامیابی کے ساتھ سربیا میں صفائی کا کاروبار قائم کیا۔

مزید معلومات >
سینی گال

ان مواقع سے فائدہ اٹھایا جن سے میرا بھائی نہ فائدہ اٹھا سکا

میرے علاقے میں بہت زیادہ لوگ بیروزگار ہیں۔ میں اس کو تبدیل کرنے میں مدد کیلیےاپنا کاروبار شروع کرنا چاہتا ہوں۔

مزید معلومات >
مراکش

میرا مقصد لوگوں کو مواقع فراہم کرنا ہے

میں مراکش میں بطور لوگو ڈیزائنرخودمختار بن گیا۔ایک اچھا فیصلہ جوکہ مجھے اُمید ہے کہ دوسروں کو فائدہ دے گا۔

مزید معلومات >
نائیجیریا

مرغی خانے کا کامیاب قیام

اب میں نائیجیریا میں واپس آکر اپنے اہلخانہ کے ساتھ زندگی گزار رہا ہوں اور مرغیوں کو پال رہا ہوں۔ یہاں رہ کر کچھ بھی حاصل کرنا ممکن ہے۔

مزید معلومات >
کوسووو

چھوٹے کاروبار میں رہنمائی سے اپنے کاروبار تک کا سفر

کوسووو میں اب میں میرا خود کا ہیئرسیلون ہے۔یہ میرےبچوں کیلیے بھی مستقبل کے مواقعوں کے دروازتے کھولتاہے۔

مزید معلومات >
سربیا

واپسی کے بعد خاندان کی توجہ تعلیم اور تربیت پر

4لڑکیوں کے والد اپنے بچوں کے بہتر مستقبل کیلیےپُرامید ہیں۔جرمن انفارمیشن سینٹر فار مائیگریشن،ٹریننگ اینڈ امپلائمنٹ (ڈی ماک) اس میں خاندان کی مدد کررہا ہے۔

مزید معلومات >
سربیا

گھر واپسی کی خوشی

مجھے سربیا میں بیوٹی پارلر میں ایک نیا پیشہ ورانہ گھر مل گیا۔ یہاں تک کا میرا راستہ کافی طویل اور مشکل تھا۔

مزید معلومات >
گھانا

وہ کپڑا جس سے فیشن کا ایک نیا آغاز ہوا

سیموئل نے یورپ میں بہتر زندگی کی تلاش میں گھانا چھوڑا ۔کئی کٹھن سالوں کے بعد وہ واپس گھانا آچکے ہیں اور اب اپنے آبائی وطن میں نئی زندگی شروع کرنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے بڑی احتیاط کے ساتھ خود کے کپڑے کے کارخانے کا منصوبہ تشکیل دیا یہاں تک کہ وہ اُس وقت جرمنی میں ہی تھے۔

مزید معلومات >
گھانا

تبادلے کی حوصلہ افزائی

میں نے 2بار گھاناسے یورپ کیلیے رخت سفر باندھا اور دونوں بار مجھے کامیابی کے بغیر واپس لوٹنا پڑا۔اب میں اعتماد کے ساتھ اپنے مستقبل کی جانب دیکھ سکتا ہوں اور اس کیلیے میں گھانین-جرمن سینٹر فار جابز،مائیگریشن اینڈ ری اینٹی گریشن(جی جی سی) کا شکرگزار ہوں۔

مزید معلومات >
کوسووو

اپنے ملک میں اپنی صلاحیتوں کا استعمال

اب میں بڑھئی ہوں جوریستوران کا تمام کام کرتا ہے۔اگرچہ اپنے من پسند کام(خوابوں کی نوکری)میں کامیابی کیلیے راستہ کافی طویل تھا۔

مزید معلومات >
مصر

’جب بحران آتا ہے بہت سے افراد اپنے آبائی ملک لوٹ جاتے ہیں‘

سحر علی مصر – جرمن سینٹر فار جابز،مائیگریشن اینڈ ری اینٹی گریشن (ای جی سی) کی سربراہ ہیں،اس نئے مرکز کا آغاز نومبر کے اوائل میں قاہرہ میں ہوا ہے۔اپنی گفتگو کے دوران اُنہوں نے بتایا کہ یہ مرکز کیا کرتا ہے اور وہ اِس کیلیے اتنی پُرامید کیوں ہیں۔

مزید معلومات >
سینی گال

اب امید کی کرن دکھائی دینے لگی ہے

میرا خیال تھا کہ یورپ جانے سے میری تمام مشکلات حل ہوجائیں گی لیکن ایسا نہیں ہوسکا۔ اب میں سینیگال میں رہتا ہوں اور بہت خوش ہیں، اس کیلیے میں ہاؤس آف ہوپ کا شکرگزار ہوں،جنہوں نے مجھے نفسیاتی مدد فراہم کی۔

مزید معلومات >
سینی گال

درزی کے کام سے بحران کا ڈٹ کر سامنا کیا

فیشن ڈیزائنر ٹوٹی نے "سکسیس فل اِن سینیگال" منصوبے کی مدد سے اپنا خود کا ٹیلرنگ(درزی) کا کاروبارشروع کیا ہے۔

مزید معلومات >
تیونس

سیاحت کی جانب تیز تر قدم

تیونس میں حکومت کی زیر سرپرستی میں چلنے والے دو ووکیشنل کالجز نوجوان لڑکوں اور لڑکیوں کو یہ سیکھاتے ہیں کہ کس طرح کیٹرنگ اور ہوٹل کی صنعت میں اپنا کیریئر(عملی مستقبل) شروع کریں۔

مزید معلومات >
جرمنی

اپنے ساتھ لائے ہوئے ہنر سے ایک نیا آغاز

جو لوگ جرمنی میں عملی تربیت کا مظاہرہ کرسکتے ہیں اُن کے پاس اپنے آبائی وطن میں نوکری کی تلاش کے مواقع بڑھ جاتے ہیں۔اسی لیے جو واپس جانے کی خواہشمند ہیں وہ یہاں قینچی، ہیئر ڈرائیر اور بال رنگنے کی مشقیں کررہے ہیں۔

مزید معلومات >
البانیا

میدان میں پہلا قدم

البانیا میں یہ پروگرام جی آئی زیڈ کی جانب سے کرایا جاتا ہے تاکہ نوجوان مرد اور خواتین کو ہوٹل انڈسٹری میں نوکری کیلیے تیار کیا جاسکے اور کامیابی کیساتھ نوکری کی تلاش کے امکانات کو بڑھایا جائے۔

مزید معلومات >
گھانا

مجھے واپس آنا تھا، مدد کے لیے

ڈیوڈ یامینسا ٹیٹ آکرا میں گھانین جرمن سینٹر فار جابز،مائیگریشن اینڈ ری اینٹی گریشن (ایم آئی اے سی) کے ڈائریکٹر ہیں، اس مختصر انٹرویو میں انہوں نے سینٹر کے کام اورکس چیز نے اُنہیں ذاتی طور پر تحریک دی اُس حوالے سے بات چیت کی ہے۔

مزید معلومات >
سربیا

’ان لوگوں کی مشکلات، میری مشکلات ہیں‘

جرمنی سے واپس لوٹنے والا خاندان اپنے بچوں کیلیےاسکول کی تلاش میں ہے۔ جنوبی سربیا کے ایک گاؤں کے مرد اور خواتین جاننا چاہتے ہیں کہ نوکری کس طرح حاصل کی جائے۔ تمارا ویسینوویک اُن کی اور دیگر افراد کی مدد کرتی ہیں۔ وہ جرمن انفارمیشن سینٹر آن مائیگریشن،ٹریننگ اینڈ امپلائمنٹ (ڈی ماک) اِن سربیا کے مشیر ہیں۔

مزید معلومات >
نائیجیریا

اپنی پسندیدہ نوکری سے ایک نیا آغاز

یورپ کیلیے میرا سفر لیبیا میں ختم ہوا لیکن اب میں اور میرا بھائی اپنے آبائی ملک نائجیریا میں خود کا ٹیلرنگ(درزی) کا کاروبار چلا رہے ہیں۔

مزید معلومات >
جرمنی

علم کا حصول

کاروبار کو کامیابی سے چلانے کی چاہت تجارتی سوجھ بوجھ چاہتی ہے۔سپارک اسین سٹفٹنگ کی جانب سے کرایا جانے والا کورس سکھاتا ہے کہ اچھے طریقے سے علم کیسے حاصل کیا جاسکتا ہے۔

مزید معلومات >
کوسووو

اپنے خاندان کے لیے بہتر مستقبل

میرا نام عجیم ہے اور میں کوسووو سے آیا ہوں۔میں ماربل انڈسٹری میں کام کرتا تھا لیکن میری تنخواہ انتہائی کم تھی۔ جس سے گھر کا خرچ چلانا انتہائی مشکل ہوتا تھا۔تو2015 میں میں اپنی اہلیہ اور تین بچوں کے ساتھ جرمنی چلا آیا اور ہم نے پناہ کیلیے درخواست دے دی۔

مزید معلومات >
عراق

اربیل کا کامیاب حجام

میرا نام بیسٹون ہے؛میں 32 سال کا ہوں اورمیں عراق کے شہر اربیل سے آیا ہوں۔ میں شادی شدہ اور 2 بچوں کا باپ ہوں۔ہم سب 2018 میں جرمنی گئے ،کیونکہ عراق میں ہمارے لیے حالات پہلے سے بدتر ہوگئے تھے لیکن جرمنی میں بھی ہمارے لیے زندگی اچھی نہ تھی۔آج ہم اربیل واپس آچکے ہیں اور میرا اچھا کیریئر ہے۔ اب میں ایک ہیئر ڈریسر ہوں۔

مزید معلومات >
البانیا

البانیہ میں نئی نوکری اور نئی خوشیاں

میرا نام ری الاف اور عمر 25سال ہے۔میں2018کے آغاز میں جرمنی گیا اور وہاں اپنا کیریئر شروع کرنا چاہتا تھا۔ لیکن5ماہ گزارنے کے بعد مجھے یہ احساس ہوا کہ بغیر قانونی حیثیت کہ یہ مشکل ہوگا۔تو اپنے وطن البانیا واپس آگیا۔اس کے بعد میرے لیے مواقعوں کے نئے دروازے کھل گئے۔جو ہوا وہ یہ تھا

مزید معلومات >
سربیا

اپنی کمپنی سے نئے مواقع

میرا نام ساسا ہے۔میں نے وسطی سربیا کے شہرکروشیواتس میں جنم لیا اور جرمنی میں کئی سال گزارنے کے بعد میں اپنے گھر لوٹا۔اس دوران میں سربیا میں اپنی کمپنی کھولنے کے قابل ہوا،یہ وہ چیز تھی جس کا میں نے ہمیشہ سے خواب دیکھا تھا۔ لیکن میں نےکچھ مدد بھی لی۔ یہی میری کہانی ہے۔

مزید معلومات >
گھانا

غیریقینی صورتحال کا خاتمہ

میرا نام ناں ہے؛میں29سال کی ہوں اور گھانا سے آئی ہوں۔میں بطور ایونٹ منیجر کام کرتی تھی۔2015 میں ڈویلپمنٹ اکنامکس اینڈ انٹرنیشنل اسٹڈیز کے ماسٹر ڈگری پروگرام کیلیے جرمنی گئی۔لیکن یہ آغاز میں ہی واضح تھا کہ اختتام پر مجھے واپس لوٹنا ہوگا۔میں ترقی میں اپنے ملک کی مدد کرنا چاہتی تھی۔ساتھ ہی ساتھ میں غیریقینی کا شکار تھی کہ وہاں کسی طرح اپنا مستقبل بناسکتی ہوں۔

مزید معلومات >
سربیا

سیفٹی اور اس کا خاندان

میرا نام سیفٹ ہے اور میں سربیا سے آیا ہوں۔اپنے ملک میں طویل عرصے تک بطور مستری اور سجاوٹ والا کام کرنے کے بعد میں قسمت آزمانے جرمنی آیا ۔ اگرچہ یہاں نوکری کی تلاش انتہائی مشکل کام تھا۔ تو میں نے سربیا واپس جانے پر غور شروع کردیا ۔ جس کے بعد میرے لیے فیصلہ لیا گیا اور جرمن حکام نے مجھے ڈیپورٹ کردیا۔

مزید معلومات >
مراکش

مراکش میں ایک خودمختار درزی کی دکان

میرا نام سید ہے اور میں مراکش کے ضلع فیس میں پلابڑھا۔یہاں میں نے درزی کا کام سیکھا۔ مجھے لگا کہ دیگر جگہوں پر مواقع زیادہ ہوں گے،تو 2015 میں سب سے پہلے ترکی اور پھر یونان گیا۔آخری کار میں جرمنی پہنچا۔ اُسوقت میں میری عمر30سال تھی اور جرمنی میں کام کی تلاش کیلیے پُرامید تھا۔

مزید معلومات >
گھانا

اپنی دکان سے ایک نیا آغاز

میرا نام ڈیرک ہے؛میں گھانا سے آیا ہوں اورمیری عمر29 سال ہے۔میں نے کمپیوٹر سائنس میں تعلیم حاصل کی لیکن اپنے ملک میں نوکری نہ حاصل کرسکا۔ میں2014 میں بطور سیاح جرمنی آیا اور پھر وہیں رک گیا اور ریسٹورنٹ میں کام کرنے لگا۔لیکن میری زندگی ویسی نہیں تھی جیسے میں نے سوچی تھی۔

مزید معلومات >
عراق

اپنے خاندان سے دوبارہ ملاپ

میں اپنی زندگی میں آگے بڑھنے کیلیے جرمنی گیا۔ جانیں کہ میں اربیل میں دوبارہ کیوں رہائش پذیر ہوں اور میں واپس کیسے آیا؟

مزید معلومات >
نائیجیریا

میری کمپنی، میرا مستقبل

میرا نام جیری ہے اور میں نائجیریا سے آیا ہوں۔2014 میں اسکالرشپ کی وجہ سے میں نے ایک سال برطانیہ میں انجینئرنگ کی تعلیم حاصل کی۔ اُس کے بعد مجھ پر یہ واضح ہوگیا:میں نائیجیریا واپس جانا چاہتا ہوں اور اپنے علم کو اپنے ملک میں استعمال کروں۔

مزید معلومات >
گھانا

فٹبالر سے بیکر بننے کا سفر

یورپ میں پیشہ ور فٹبالر بننے کا میرا خواب غیر حقیقی تھا۔ اب گھانا میں میری خود کی بیکری ہے اور میں اپنا اچھے سے خیال رکھ سکتا ہوں۔

مزید معلومات >
گھانا

گھانا میں مواقع کی تلاش

کام کی تلاش میں گھانا کو چھوڑنا؟ ہر کسی کو اس پر احتیاط سے غور کرنا چاہیے۔ ہمارے لیے یہاں پر تمام مواقع موجود ہیں۔

مزید معلومات >
سربیا

میری اپنی آئی ٹی کمپنی

ایسی کمپنی شروع کرنا جو انٹرنیٹ مارکیٹنگ پر زور دیتی ہو اُس نے انہیں اُمید دلائی:جرمنی سے سربیا لوٹنے کے بعد امیلیانو نے اپنا نیا مستقبل بنایا۔ آج وہ اپنے کاروبار کو بڑھانے اور کئی نئے ملازمین کو نوکریوں پر رکھنے پر غور کررہا ہے۔

مزید معلومات >
عراق

مینیو پر اطمینان

میرا نام بلال ہے۔2015 میں معاشی مشکلات کے بعد میں نے عراق چھوڑا اور جرمنی چلا گیا۔ میں وہاں بہتر زندگی کی تلاش میں تھا۔میں 12 دن کے سفر کے بعد بغیر مناسب کھانے یا رہائش کے بعد جرمنی پہنچا ۔میری اُمیداپنی مشکلات کا حل تلاش کرنا تھا۔

مزید معلومات >
تیونس

تیونس کا شہد

سلام، میں خالد ہوں۔ میں 34 برس کا ہوں اور تیونس سے آیا ہوں۔ میرے خاندان کا پھلوں اور سبزیوں کا کاروبار ہے جہاں میں نے طویل عرصے تک کام کیا۔ یورپ میں رہنا میرا ہمیشہ سے خواب تھا ۔ 2008میں جب میں 24سال کا تھا میں نے یورپ کیلیے رخت سفر باندھا۔ آغاز میں، میں نے ایک سال اٹلی میں گزارا۔ جس کے بعد میں بذریعہ فرانس اور بیلجیئم جرمنی پہنچا ۔

مزید معلومات >
مراکش

مراکش کے قدرتی کاسمیٹکس

میرا نام یاسین ہے اور میں مراکش سے آیا ہوں۔ میں نے ضلع فیس سے اسلامی تعلیم مکمل کی لیکن گریجویشن کے بعد نوکری حاصل نہیں کرسکا۔اُس کے بعد خوش قسمتی سے پروموشن آف رورل یوتھ امپلائمنٹ(پی ای جے) پراجیکٹ کی جانب سے تربیت حاصل کرنے میں کامیاب رہا۔

مزید معلومات >
البانیا

بیکنگ کے ہنر میں مستقبل

میرا نام اگریتا ہے اور میں البانیہ سے آئی ہوں۔میں نے جرمنی 2016میں اپنے خاوند اور3 بچیوں کے ساتھ جرمنی ہجرت کی۔ہم کیا چاہتے تھے؟ ایک بہتر زندگی! درحقیقت یہ بہت اچھا رہا:میرے خاوند کو ویلڈنگ اور مجھے صفائی کا کام اور بچوں کو اسکول میں داخلہ ملا۔انہوں نے جلد ہی جرمن سیکھ لی۔ اس وقت تک ہم نے اپنے اہلخانہ، دوستوں اور البانیہ کے رسم و رواج کو بہت یاد کیا۔لہذا 2017 جنوری میں ہم واپس لوٹ گئے۔

مزید معلومات >
جرمنی

کورونا وبا کے دوران وطن واپسی کے ارادے - سوالات و جوابات

عام حالات میں جب آپ اپنے ملک واپس لوٹ رہے ہوں تو لوگ کئی طرح کے سوالات پوچھتے ہیں۔کورونا کی وبا نے تو حالات کو یکسر ہی بدل کر رکھ دیا ہے۔یہاں آپ ماضی اور حال کے چند اہم حقائق سے سیکھ سکتے ہیں ۔8سوالات اور اُن کے جوابات۔

مزید معلومات >
جرمنی

آزادانہ اقدام

سولوڈی (سولیڈیرٹی ود وومین اِن ڈسٹریس) انسانی حقوق کا ادارہ ہے،جو مشکل صورتحال میں خواتین کی مددکرتا ہے اور اِنہیں خودمختار بناتا ہے۔ سولوڈی جی آئی زیڈ کی شراکت دار ہے اور جرمنی میں موجود خواتین جو اپنے وطن واپس لوٹنے کے خواہشمند ہوں اُن کی مدد کرتا ہے

مزید معلومات >
جرمنی

وطن واپسی کے لیے پُل کا کردار

اسٹیفن گروئنبام جی آئی زیڈ کے اُن 20 رضاکاروں میں سے ایک ہیں جو جرمنی کی تقریباً تمام ریاستوں میں ہی موجود ہیں۔یہ تمام جرمنی میں موجود کونسلرز اوردیگر ممالک میں کام کرنے والوں کے درمیان رابطہ پل کا کردار ادا کرتے ہیں

مزید معلومات >
جرمنی

ہم پہلے سے بھی مضبوط نیٹ ورک بنا رہے ہیں

کورونا کی وبائی صورتحال کے دوران اسٹارٹ ہوپ ایٹ ہومز کی نئے کاروباری کیلیے مشاورت کس طرح کام کررہی ہے؟

مزید معلومات >
گھانا

’بھروسہ آن لائن بھی قائم کیا جا سکتا ہے‘

گھانین-جرمن سینٹر فار جابز،مائگریشن اینڈ ری اینٹیگریشن (جی سی سی) کی ارنیسٹینا آڈو نے کورونا وبا کے دوران اپنے کام کے حوالے سے گفتگو کی۔

مزید معلومات >
البانیا

ڈی ماک اب ایک جانا پہچانا نام ہے

کورونا بحران کے دوران کام کے حوالے سے بات کرتے ہوئے مشیر ہیلسا ڈوکا اور ڈوریسا لالا کا کہنا تھا کہ حالیہ چند سالوں کے دوران ہماری ساکھ اور صاف گوئی کی وجہ سے ڈی ماک پر لوگوں کے اعتماد میں اضافہ ہوا ہے اور اب اس کا فائدہ ہورہا ہے۔

مزید معلومات >
نائیجیریا

روزی کمانے کے لیے – اور عالمی وباء کو روکنے کے لیے – ماسک بنانا

سینتھیانائجیریا میں اپنا فیشن اسٹور کھولنے کی خواہشمند تھیں لیکن پھر کووڈ-19کی وبا نے دنیا کو اپنی لپیٹ میں لے لیا۔ اب سینتھیا فیس ماسک کی سلائی کررہی ہیں اور اِس بحرانی دور میں سرکاری آرڈر سے اُنہیں مالی مددمل رہی ہے۔

مزید معلومات >
جرمنی

کام میں ہم آہنگی جاری ہے، ایک مختلف انداز میں

تربیتی کورسز کا انعقاد کیا نہیں جاسکتا،واپس جانا ناممکن ہے اوراِن ممالک میں نوکریوں کے حوالے سےبہت دباؤ ہے:نیو پلیسمنٹ انٹرنیشنل(این پی آئی) کے منصوبے نے کورونا بحران میں دوسرا جنم لیا ہے۔موجود صورتحال پر چار سوالات اور اُن کے جوابات۔

مزید معلومات >